کارروائی Flekosteel – کیسے استعمال کی جائے (ہدایات), ساخت, گاہک کے جائزے, نتیجہ


جوڑوں کی درد کا علاج کیسے کیا جائے

میں آپ کو اپنی کہانی سناتا ہوں کہ کس طرح میں گھٹنوں کے جوڑوں کے انحطاط اور کمر کے نچلے حصے میں ہڈیوں کی ناقص افزائش کو شکست دینے میں کامیاب ہوا۔ میں کوئی ڈاکٹر نہیں ہوں، میں بتا نہیں پاؤں گا کہ میں نے کس طرح اس کا علاج کیا۔ میں صرف بتاؤں گا کہ کیا ہوا۔

میں 62 سال کا ایک پنشنر ہوں۔ ریٹائرمنٹ سے پہلے میں میٹالرجیکل (فلزیاتی) پلانٹ کی بلاسٹ فرنیس میں کام کرتا تھا۔ پہلے میں ایک عام کارکن تھا مگر بعد میں میں نے اپنی حیثیت بدل لی اور سیفٹی انجینیر کے طور پر کام کرنا شروع کر دیا۔ جو لوگ بھٹی کے کارکن کے پیشے سے واقفیت رکھتے ہیں وہ جانتے ہیں کہ یہ سٹیل کا کام کرنے والے کے پیشے سے بڑی حد تک مختلف ہے۔ وہ تو صرف سٹیل کو کنورٹروں میں ابالتے ہیں، ان کا کام صرف بیٹھے بٹھائے لیور اور بٹن دبانا ہوتا ہے۔ ہم تو ہر کام پرانے طریقےسے کرتے تھے۔ ضرورت پڑنے پر ہم بیلچہ اور کبھی کبھی کروبار بھی استعمال کرتے تھے۔ بھٹی کے نزدیک انتہائی گرمی ہوتی تھی اور لگاتار گرم ہوا کے تھپیڑوں سے بچ نکلنے کی کوئی راہ نہیں ہوتی تھی۔ میں نے تو حقیقتاً وہاں اپنے گھٹنے اور کمر کا نچلا حصہ تباہ کر لیا۔

ہر وقت جاری رہنے والے درد خدوخال پر براہ راست برا اثر ڈالتے ہیں۔ میں تو پچھلے 3 سال میں بہت بوڑھا ہو گیا۔

اچھی چیز یہ تھی کہ مجھے لمبے عرصے تک صحت کے لیے نقصان دہ پیشے پر کام کرنے کی وجہ سے 50 سال کی عمر میں ریٹائر ہونے کا حق حاصل تھا۔ میرے اندر اسے مزید برداشت کرنے کی سکت باقی نہیں رہ گئی تھی۔ میں نے آخری سال بڑی مشکل سے بے حسی پیدا کرنے والے ٹیکوں کی بدولت پورا کیا۔ میں خوش قسمت نکلا – ایک انجینیر کی آسامی خالی تھی۔ یہ نیا کام آسان تھا، بھٹی سے بہت دور۔ اس نے میری صحت کو بچایا اور میری بیماریوں پر مفید طور ہر اثر انداز ہوا۔ درد کم ہو گیا، اور میرا گزارا کچھ عرصے تک بے حسی کے ٹیکوں کے بغیر ہی ہو گیا۔ لیکن ریٹائرمنٹ سے 3 سال پہلے مجھے ایک حادثہ پیش آ گیا۔ ایک مچھلی پکڑنے کے دورے کے دوران میری ٹانگ بری طرح زخمی ہو گئی۔ درد کی شدت اور بے حسی کے ٹیکوں کے ایک اور دور نے میرا نازک توازن متاثر کر دیا اور میرا گھٹنوں اور کمر کے نچلے حصے میں شدید دردوں سے واسطہ پڑ گیا۔


زخمی ہونے کی وجہ سے میرا گنٹھیا تیزی سے بڑھنا شروع ہو گیا۔

میں تو ان تین سالوں کو یاد بھی نہیں کرنا چاہتا۔ یہ میرے لیے زندہ جہنم تھا! صبح میری بیوی مجھے ایک ٹیکہ diclofenac کا لگاتی، پھر میں ایک کام پر لگواتا اور پھر ایک اور جو میری بیوی شام کو گھر پر لگاتی۔ آپ حیران تو ضرور ہونگے کہ کس کم بختی کی وجہ سے میں ریٹائر نہ ہوا؟ میں نے اپنے بیٹے کی مدد کی۔ اس کے ہاں نئے بچے کی پیدائش ہوئی تھی اور اس کی نوکری چلی گئی تھی۔ مجھے ہر صورت اس کے کنبے کی مدد کرنی تھی۔

آخری سال میں نے چھڑی کے سہارے چل کر گزارا۔ اگلے صحت کے معائنے سے ذرا پہلے میں نے صوابدیدی استعفے کا خط لکھا۔ ویسے میں معائنے میں کامیاب بھی نہیں ہو سکا تھا۔

میں نے اپنا علاج کیسے کیا? جوڑوں اور کمر کے لیے Flekosteel

جوڑوں کی بیماریوں کے وسیع تجربے کی بنیاد پر ، میں کہہ سکتا ہوں کہ ڈاکٹروں کو صرف chondrosamine کا ہی پتہ ہے۔ اور وہ کبھی ہائڈروکارٹیزون یا ڈپروسپین بھی تجویز کر سکتے ہیں۔

لیکن ان کا کوئی فائدہ نہیں!

مزید برآں، لگاتار Diclofenac کے ٹیکے جو کہ مجھے درد میں افاقے کے لیے لگوانے پڑتے تھے، کی وجہ سے معدے میں درد رہتا تھا۔ مجھے اس میں بسمتھ کا سب نائٹریٹ معدے کی جھلی بچانے کے لیے شامل کرنا پڑا۔

جب میں ایک موثر اکسیر کی تلاش میں تھا تو مجھے 4 بار پنکچرز کے ذریعے مائع نکلوانا پڑا۔ آخری بار نکلواتے وقت اس میں پیپ تھی۔ ڈاکٹر نے مجھے بتایا کہ عین ممکن تھا کہ مجھے مصنوعی اعضاء ڈلوانے کے لیے سرجری کروانی پڑے۔ وہ میرے گھٹنوں کے بے کار اعضاء کی جگہ ٹائٹنیک سے بنے اعضاء ڈال دیں گے۔ میں نے اس بارے میں مزید معلومات اکٹھی کرنی شروع کر دیں۔ مجھے معلوم ہوا کہ اگر یہ تبدلی اعضاء کامیاب بھی ہو جاتی ہے تو پھر بھی مجھے چھڑی کے ساتھ ہی چلنا پڑے گا۔ صرف سرجری کا خرچ کم از کم 4000$ تھا۔ یہ جرمنی کے تیار کردہ اعضاء پر مشتمل قیمت تھی، ہمارے اعضاء پر 1000$ کم خرچ آتے مگر ان کے ساتھ پیچیدگی کا خطرہ زیادہ تھا۔ مختصراً میں نے مزید وقت لینے اور مکمل سوچ بچار کا فیصلہ کیا۔

میں نے اپنا وقت لینے اور اپنی مستقبل کی قسمت بارے گہری غور و فکر کا فیصلہ کیا۔

مجھے نظر آ رہا تھا کہ میرے پاس معذوری سے بچنے کا کوئی راستہ نہیں تھا۔ اور میرے پاس اتنی مقدار میں پیسہ بھی نہیں تھا!

میں نے اکٹھے اپنی بیوی کے ساتھ مل کر کافی سوچ بچار کی اور اس پر بات کی ( وہ حقیقت میں بہت اعلیٰ کردار ادا کر رہی تھی) اور سرجری کروانے کا فیصلہ کیا۔ 61 سال کی عمر میں زندگی ختم نہیں ہو جاتی اور جہاں تک پیسے کا تعلق ہے تو یہ تو خرچ کرنے کے لیے ہی ہوتا ہے۔

اور پھر اچانک معجزہ وقوع پذیر ہو گیا! Flekosteel کریم, کی رائے, آرڈر کریں

میں اصل میں اسکے لیے اپنے بیوی کا مشکور ہوں۔ اس کی ایک سکول کی دوست تھی جو قصبے کے ایک افسر کی بیوی تھی۔ یہ آدمی بھی میری طرح گھٹنوں کی درد میں مبتلا تھا۔ ہو سکتا ہے اتنا شدید نہ ہو۔

ایک دن میری بیوی گلی میں چلی جا رہی تھی کہ اس کے ساتھ ہی ایک کار آ کر رکی۔ یہ افسر کار سے نکلا اور جلدی سے اپنے قدموں میں سپرنگ کا تاثر دیتے ہوئے سٹور میں چلا گیا۔

اسی دن نجمہ (میری بیوی) نے اپنی دوست کو کال کیا اور اس سے سوال پوچھنا شروع کیے کہ کس طرح ناظم نے اپنے گھٹنوں کا علاج کیا۔ جہاں تک ہمیں علم تھا اس نے سرجری نہیں کروائی تھی۔ علاوہ ازیں، لوگ سرجریوں کے بعد ایسے بھاگ دوڑ نہیں کرتے۔


میری بیوی نجمہ نے مجھے بچا لیا، میں اس کا بہت مشکور ہوں۔

معلوم پڑا کہ یہ سب اس نئے مصنوعہ Flekosteel کا کمال تھا اس کے خاوند نے اپنا اثر و رسوخ استعمال کیا اور لگ بھگ ایک ماہ میں وہ اپنے پیروں پر واپس کھڑا ہو گیا۔ اور میں ایک بار دوبارہ کہوں گا – ایک ماہ میں!

ہم دونوں بہت جذباتی مگر اسی وقت پریشان بھی ہو گئے۔ یہ مصنوعہ ہمارے ملک میں فروخت نہیں ہوتا۔ اور ہمیں نہیں معلوم تھا کہ ہم اسے یہاں کس طرح آرڈر کر سکتے تھے جہاں ہر چیز صرف ڈاکٹری نسخے پر دستیاب ہے۔ ایک لفظ میں کہوں تو، ہم نے سرجری کے لیے اپنی تیاری جاری رکھی۔

ڈیڑھ ماہ بعد نجمہ کی دوست نے کال کر کے ہمیں بتایا کہ Flekosteel کریم نے ہمارے ملک میں سرٹیفیکیشن پاس کر لی تھی۔ میری بیوی نے اس سے ملتجیانہ انداز میں مزید معلومات حاصل کرنے کا کہا اور اس کی سچائی یقینی ہو گئی! اب ہم در اصل یہ مصنوعہ خرید سکتے تھے، لیکن بد قسمتی سے صرف سرکاری سائٹ سے ہی۔ میرا خیال ہے کہ میں سب سے پہلے آرڈر کرنے والوں میں سے ایک ہوں!


Flekosteel

میں نے اپنے قابل رحم گھٹنوں اور کمر کے نچلے حصے کا علاج شروع کیا۔ اور آپ کو بتاؤں کہ اس کا اثر ہونا شروع ہو گیا۔ پہلے پہل میں نے سوچا کہ یہ بھی بے حسی کی دواؤں کی طرح کام کرتا ہےکیونکہ لگانے کے 5-10 منٹ بعد ہی درد کم ہو گیا تھا۔ میں نے کافی حد تک بہتر محسوس کیا، اور میری کمر کے نچلے حصے نے بھی تکلیف دینا بند کر دیا۔ سچ بتاؤں، میں نے بہت عرصہ پہلے اس بارے میں ہتھیار ڈال دیے تھے۔ کاش میں کم از کم اپنے گھٹنوں کا خیال رکھ سکتا۔ میرے سر پر تو پہلے ہی سرجری منڈلا رہی تھی! لیکن اس کریم لگانے کے ایک ہفتہ بعد جب میں نے جھک کر اپنے جوتے آدھا میٹر لمبی شو ہارن کے بغیر پہن لیے تو مجھے احساس ہوا کہ Flekosteel تو بہت عمدہ علاج کرتی ہے۔

دو ہفتوں میں گھٹنوں میں درد کے بغیر میں آدھا گھنٹہ واک کر سکتا تھا! میں صاف طور پر صحت مند ہورہا تھا۔ مزید دو ہفتے بعد میں نے اپنے آپ کو صحت مند سمجھنا شروع کر دیا – اب مجھے درد نہیں ہو رہی تھی! میں آسانی سے جھک سکتا، لمبے فاصلے تک چل سکتا اور بائک کی سواری کر سکتا تھا (میں یہ سواری پسند کرتا ہوں)۔

میں اب بائک کی سواری کر سکتا اور 2 گھنٹے تک واک کرسکتا تھا۔

میرے صحت مند ہونے سے اب تک آدھا سال گزر چکا ہے۔ اب کوئی درد نہیں! اس کے باوجود کہ میں نے Flekosteel کا استعمال کئی ماہ پہلے چھوڑ دیا ہے۔ اب میں مچھلی پکڑنے جاتا ہوں، دیہی علاقے میں باغ میں کام کرتا ہوں، اور میں اپنے پوتے کی دیکھ بھال چاہت سے کرتا ہوں! میں اور میری بیوی اکٹھے جنوبی علاقوں کے دورے کی منصوبہ بندی کر رہے ہیں! میری بیوی تو وہاں کی خوبصورتی کا ذکر کرتے ہوئے چپ ہی نہیں کرتی۔


جب آپ صحت مند ہوں تو پوتے کے ساتھ کھیلیں آپ کو پریشان نہیں کرتیں بلکہ اس کے برخلاف وہ خوشی لاتی ہیں۔

تو پھر اگر آپ گنٹھیا، ہڈیوں کی ناقص افزائش یا جوڑوں کے انحطاط میں مبتلا ہیں، اور مختصر انداز میں اگر آپ کے جوڑ اور کمر دکھتے ہیں تو میری معلومات کا نوٹس لیجیے: Flekosteel – جوڑوں کا علاج کرتی ہے!

کہاں پاکستان میں Flekosteel خریدنے کے لئے, قیمت

Flekosteel کے اثرات: خریداروں کا جائزہ

نعیمہ

میں دو ہفتے پہلے سے Flekosteel استعمال کر رہی ہوں۔ میں نتائج سے بہت خوش ہوں۔ میں اس نامراد ہڈیوں کی ناقص افزائش کی بیماری کی وجہ سے پہلے سورج کی روشنی بھی نہیں دیکھ پائی تھی۔ یہ کریم تو بہت مفید ہے۔ میں اسے متاثرہ جگہوں پر لگاتی ہوں اور پھر اگلے دن تک اس کے بارے میں بھول جاتی ہوں۔ یہ بہت تیزی سے عمل کرتی ہے۔ ایک بار میری کمر کے نچلے حصے میں درد کی ٹیسیں اٹھیں اور Flekosteel نے 5 منٹ میں درد رفع کر دیا!

شہروز

مجھے ان معلومات میں بہت دلچسپی ہے۔ میری گردن کی ہڈیوں کی افزائش ناقص ہے اور اس کی وجہ سے مجھے لگاتار سر درد رہتا ہے۔ کچھ بھی تو کام نہیں کرتا، نہ مالش اور نہ ہی traumeel کے ٹیکے۔ میں بڑی امید رکھتا ہوں کہ Flekosteel میری مدد کرے گی۔

شکیل

شہروز، مجھے یقین ہے کہ یہ کام کرے گی! میری بیوی کی حالت بھی ایسی ہی ہے، Flekosteel ہی اس کا بچاؤ کر رہی ہے۔

نرگس

میں نے اسے اپنے خاوند کے لیے آرڈر کیا۔ میں تو اس مسئلے سے پریشان اور تنگ آ چکی ہوں! میں امید کرتی ہوں کہ یہ مفید ہو گی! اس کے بائیں گھٹنے کے جوڑ کی ہڈیوں میں شدید انحطاط ہے۔ بہت بری دردیں ہوتی ہیں۔

شکیل

بے شک Flekosteel اپ کی مدد کرے گی- یہ درد سے افاقہ دے گی اور ہڈیوں کے انحطاط کا علاج کرے گی، یہ اس کا براہ راست اثر ہے۔

ہمایوں

شکیل آپ کے مشورے کا شکریہ! میں چپو والی کشتی بہت چلاتا تھا جس کے نتیجے میں میری کمر تباہ ہو گئی۔ میری کمر کے نچلے حصے کی دردیں لگاتار مجھے پریشان کرتی تھیں۔ Flekosteel تو میری زندگی بچانے والا بن گیا۔

عقیل

I Flekosteel براہ راست پاکستان میں خریدی جب میں وہاں بس پر 11:55 والے ٹرپ میں تھا۔ یہ نسخہ تو بہت اچھا ہے۔ اس سے قطع نظر کہ وہ کیا کہتے ہیں، امریکن بڑی موثر دوائیاں بناتے ہیں۔ میں تو اپنے بائیں گھٹنے کے گنٹھیے کو بھول ہی گیا ہوں۔

افضل

شکریہ شکیل! Flekosteel کی بدولت میں دوبارہ فعال ہو گیا ہوں! مجھے بیٹھنے اور کھڑے ہونے میں دردوں کی وجہ سے بڑی تکلیف تھی۔ میں سوچتا تھا کہ مجھے چھڑی کے ساتھ چلنا پڑے گا جبکہ میں ابھی صرف 55 سال کا ہوں۔

صابرہ

میں کہنا چاہتی ہوں کہ Flekosteel ٹانگوں کی سوجن کا مقابلہ کرنے میں بھی موثر ہے۔ میرے ڈاکٹر نے مجھے اسے اس ظرح استعمال کرنے کا کہا، وہ (نام) میڈیکل انسٹیٹیوٹ میں کام کرتا ہے۔ سوج آپ کی آنکھوں کے سامنے ہی فوراً غائب ہو جاتی ہے۔

شکیل

میرا مسئلہ اس طرح کا تو نہیں تھا۔ لیکن میں خوش ہوں کہ Flekosteel اس مسئلے میں بھی مفید ہے۔

دلاور

میں ایک ڈرائیور ہوں اور میری کمر کے نچلے حصے کی دردیں میری پیشہ ورانہ بیماری ہیں۔ Flekosteel انہیں بڑی تیزی سے ختم کر دیتا ہے۔ اب یہ کریم ہمیشہ میری فرسٹ ایڈ کٹ میں ہوتی ہے۔

ریشم

شکریہ شکیل۔ Flekosteel نے میری بڑی مدد کی۔ ٹانگ کا درد بنا کوئی نشانی چھوڑے غائب ہو گیا! ایسا لگتا ہے جیسے میں نے دوبارہ جنم لے لیا ہو!

صائمہ

شکریہ شکیل، اس مشورے کے لیے۔ Flekosteel کی بدولت میں دوبارہ ایک مکمل انسان ہوں، اور سب سے اہم بات یہ ہے کہ میں ایک مکمل دادی اماں ہوں!

سکندر

میری نوکری میں مجھے کافی دیر تک کھڑا ہونا پڑتا ہے اور اکثر اوقات نیچے جھکنا بھی پڑتا ہے۔ Flekosteel میری کمر کے نچلے حصے کےدرد کو رفع کرنے میں بڑی کار آمد ہے اور ٹانگوں کی سوجن بھی زائل کرتی ہے۔ میں دن کے اختتام پر ٹانگوں کے مدہم درد میں مبتلا ہو جاتا تھا۔ مگر اب سب اچھا ہو گیا۔

سارہ

میں Flekosteel سے بہت خوش ہوں۔ یہ یقینی طور پر اگلی نسل کا نسخہ ہے۔ یہ بڑی تیزی سے جوڑوں کے درد کا خاتمہ کرتی ہے!

عالیہ

میں نے آرڈر کر دیا۔ میں اب شدت سے Flekosteel والے پیکیج کا انتطار کر رہی ہوں۔ لیکن اب اس سائٹ پر کوئی مخصوص پیشکش ہے۔

زرتاج

عالیہ شکریہ! مجھے رعائتی قیمت کا معلوم ہوا، میں نے تیزی سے آرڈر کیا اور عین وقت پر اس موقعے سے فائدہ اٹھا لیا۔ اور مسٹر شکیل آپ کا بھی یقیناً شکریہ!

سلمیٰ اور جاوید

ہمارا پورا کنبہ Flekosteel استعمال کرتا ہے۔ ہم دونوں کھلاڑی تھے۔ اب ہمیں اسکی قیمت چکانی پڑ رہی ہے کمر کے نچلے حصے اور ٹانگوں میں درد کی شکل میں۔ لیکن حقیقت یہ ہے کہ اب ہمیں کوئی ایسا مسئلہ نہیں ہے!

زبیدہ

ہیلو، مسٹر شکیل! میں نے اپنے اور اپنے خاوند کے لیے Flekosteel آرڈر کر دی ہے۔ مجھے امید ہے کہ یہ مفید ہو گی۔

ارم

فعال زندگی گزارنے والے لوگوں کے لیے Flekosteel لازم ہے۔ زخم، جوڑوں کی تبدیلی، اور موچ وغیرہ ۔ یہ سب طرح کی دردوں کا بخوبی ازالہ کرتی ہے!

سلطانہ

میں نے سنا ہے کہ Flekosteel اب کئی ممالک میں ملتی ہے۔ یہ بہت اچھی کریم ہے۔ یہ مفید بھی ہے!

نیلوفر

Flekosteel بڑا طاقتور نسخہ ہے۔ یہ جلدی اثر کرتی ہے اور اس کا اثر دیر پا ہے۔ بد قسمتی سے مجھے ہڈیوں کی ناقص افزائش اور گھٹنوں کے جوڑوں کے انحطاط کی امراض ہیں۔ میں ایک استانی ہوں اور مجھے اپنی نوکری تبدیل کرنے کا سوچنا پڑ گیا تھا۔ Flekosteel ان بیماریوں میں میری مدد کرتی ہے۔ کم از کم میں اب اطمینان محسوس کرتی ہوں۔ میں لگاتار اسے آفیشل فراہم کنندہ سے آرڈر کرتی ہوں۔میں ہر کسی کو ایسا کرنے کا مشورہ دیتی ہوں۔

LEAVE A REPLY